صدارتی سیکرٹریٹ

اسلام آباد ( ) صدر آزاد جموں وکشمیر سردار مسعود خان نے سانحہ پلوامہ پر فوری اور نہایت شدید رد عمل پر حکومت پاکستان اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ بھارت کو انسانیت کے خلاف جرائم کی پاداش میں مجرموں کے کٹہرے میں کھڑا کیا جائے۔ بھارت اب زیادہ عرصے تک دنیا کو کشمیر کے بارے میں جھوٹی کہانی سنا کر بے وقوف نہیں بنا سکتا۔ طلبہ سوشل میڈیا اور ابلاغ کے دوسرے ذرائع کو استعمال کرتے ہوئے بھارت کے مقابلے میں دنیا کو کشمیر کی سچی اور حقیقی کہانی بتائیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کے روز بین الاقوامی اسلام یونیورسٹی اسلام آباد میں یونیورسٹی اور جموں وکشمیر لبریشن سیل کے زیر اہتمام منعقدہ کشمیر سمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا۔ سیمینار سے بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کے صدر ڈاکٹر احمد یوسف الدرویش وفاقی وزیر علی محمد خان ، سابق وزیر دفاع لیفٹیننٹ جنرل (ریٹائرڈ) خالد نعیم لودھی، پروفیسر ڈاکٹر ثمینہ اور دیگر مقررین نے خطاب کیا۔ صدر سردار مسعود خان نے کہا کہ بھارت نے کشمیر کو اپنے قبضہ میں رکھنے کے لئے کشمیریوں کو ختم کرنے کی جو پالیسی بنائی ہے وہ نہایت خطرناک ہے اس کو سمجھنے کی ضرورت ہے اور اس پالیسی کے توڑ کے لئے مناسب حکمت عملی بنانے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت نہتے عوام پر جو وحشیانہ مظالم کر رہا ہے اور جس طریقے سے نوجوانوں کو سر، گردن اور آنکھوں کا نشانہ لگا کر گولیاں مار کر شہید کر رہا ہے وہ جنیوا کنونشن کے تحت جنگی جرم ہے۔ بین الاقوامی قوانین کے تحت قابض فوج سویلین اور مسلح مقابلہ نہ کرنے والوں کے خلاف طاقت کا غیر متوازن اور گیر ضروری استعمال نہیں کر سکتی۔ جبکہ بھارت نے پچھلے دو سال میں تقریباً چھ ہزار نوجوانوں کو پیلٹ گنوں کے ذریعے زخمی جن میں سے ایک ہزار سے زیادہ ساری عمر کے لئے بینائی سے محروم ہو گئے ہیں اور یہ بات صرف ہم نہیں کہہ رہے ہیں بلکہ الجزیرہ اور نیو یارک ٹائمز جیسے بڑے بڑے اخبارات اور جرائد بھی یہی بات کہہ رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ بات نہایت افسوسناک ہے کہ ذرائع ابلاغ اور انسانی حقوق اور غیر حکومتی تنظیمیں تو اپنا کردار ادا کر رہی ہیں لیکن برسلز، لندن، واشنگٹن اور دوسرے ورلڈ کیپٹیل میں خاموشی چھائی ہے ۔ اس خاموشی کے پیچھے ان ممالک کے بھارت کے ساتھ معاشی اور سیاسی مفادات ہیں لیکن وہ وقت دور نہیں جب دنیا اپنے تمام تر مفادات کے باوجود بھارت کے جھوٹ کو جھوٹ کہنے پر مجبور ہو گی۔ اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمیشن اور برطانیہ کے کل جماعتی پارلیمانی کشمیر گروپ کی رپورٹس کو کشمیریوں کی کامیابی قرار دیتے ہوئے صدر مسعود خان نے کہا کہ تاریخ میں پیلی مرتبہ بھارت کی حکومت بین الاقوامی بر