Bradford: President AJK Barrister Sultan Mahmood Chaudhry addressing a function in Bradford۔

۔

بریڈ فورڈ( )07 جون2022ء

صدر آزاد جموں وکشمیر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ بریڈ فورڈ میں کشمیریوں کی بہت بڑی تعداد آباد ہے اور یہاں سے دو کشمیری نژاد ممبر پارلیمنٹ ناز شاہ اور عمران حسین منتخب ہوئے ہیں اور میں نے بھی بریڈ فورڈ یونیورسٹی سے ڈگری لی ہے۔ مجھے خوشی ہے کہ میں آج یہاں برطانوی ممبران پارلیمنٹ، لارڈ میئرز کے ہمراہ تقریب میں شریک ہوں۔ برطانیہ میں مقیم کشمیریوں نے مسئلہ کشمیر کو اُجاگر کرنے کے لئے ہمیشہ میرا ساتھ دیا ہے اور میرے دورے کا مقصد بھی یہی ہے کہ میں انٹرنیشنل کمیونٹی کو مقبوضہ کشمیر کی سنگین صورتحال اور یاسین ملک کو عمر قید کی سزا کے خلاف آگاہ کروں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج یہاں بریڈفورڈ میں ایک تقریب سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر تقریب کے میزبان کونسلر کامران حسین، سابق لارڈ مئیر غضنفر خالق، سابق لارڈ مئیر اورنگذیب، کونسلر حق نواز، کونسلر گوہر الماس، سابق مشیر چوہدری حق نواز، سابق کونسلر چوہدری الطاف اور دیگر مقررین نے بھی تقریب سے خطاب کیا۔ اس موقع پر صدر ریاست آزاد جموں وکشمیر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے اپنے خطاب میں مزید کہا کہ مسئلہ کشمیر اس وقت ایک اہم اور نازک موڑ میں داخل ہو چکا ہے لہذا دنیا بھر میں جہاں جہاں بھی کشمیری آباد ہیں بالخصوص برطانیہ میں مقیم کشمیریوں کی یہ ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ مسئلہ کشمیر کو عالمی سطح پر اُجاگر کرنے کے لئے اپنا کردار ادا کریں۔ بھارت مقبوضہ کشمیر میں تیزی سے تبدیلیاں کر رہا ہے تاکہ وہ مسئلہ کشمیر کو ختم اور مقبوضہ کشمیر کو ہڑپ کر سکے۔ لہذا اب ضرورت اس امر کی ہے کہ ہمیں مسئلہ کشمیر کو عالمی سطح پر جارحانہ انداز میں اُٹھانا ہو گا۔ مقبوضہ کشمیر کے عوام اس وقت ایک مشکل صورتحال سے گزر رہے ہیں۔ حال ہی میں حریت رہنماء یاسین ملک کو بھارتی عدالت نے جھوٹے مقدمات میں عمر قید کی سزا سنائی ہے جس پر ہمیں پوری دنیا میں آواز اُٹھانی ہو گی اور یاسین ملک کی رہائی کے لئے انٹرنیشنل کمیونٹی پر دباؤ ڈالنا ہو گا۔ صدر آزاد جموں وکشمیر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا کہ بھارت نے مقبوضہ کشمیر میں مظالم کی انتہاء کر دی ہے لیکن کشمیری عوام بہادری سے بھارتی جبر و استبداد کا مقابلہ کر رہے ہیں لہذا ہمیں بھی اس سلسلے میں اپنا کردار ادا کرتے ہوئے ڈیڑھ کروڑ کشمیری عوام کی آواز عالمی برادری تک پہنچانا ہوگی تاکہ انٹرنیشنل کمیونٹی بھارت پر مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں کو بند کرانے کے لئے اپنا دباؤ بڑھائے۔

٭٭٭٭

Download as PDF